کراچی ٹرانسپورٹ کب بہتر ہو گا ؟

تحریر و تحقیق:  سیدہ نسرین   ۱۱ جنوری 2017     

محترم قارعین !

کراچی ٹرانسپورٹ سسٹم کے بارے میں کیا کہا جائے؟ انتہائی خستہ حال ٹرانسپورٹ سسٹم میں بے چارے کراچی کے عوام روزانہ اپنی جانوں کو ہتھیلی میں لئے کئی گھنٹے سفر کر تے ہیں ۔اگر صحیح سلامت گھر واپس لوٹ آئیں تو نصیب ورنہ اگر کراچی کی خراب ٹریفک کی نظر ہو جائیں تو انا للہ وان الہ راجعون ان دعووٰں کو سن سن کر کان پک گئے ہیں ۔ جو ہر موجودہ اور آنے والی حکو متوں نے کئے أ ہر بار سہانے سسہا نے خواب دکھا کر خوب ووٹ اکھٹا کرتےہیں حکو مت کے مزے لوٹتے رہتے ہیں مگر نتیجہ ہمیشہ صفر ہی رہا ۔ وہ ہی ٹریفک کا خستہ نظام،ہر روز کئی ٹریفک حادثات ہو نا تو اب معمول کی بات بن گئی ہے لیکن آخر کب تک ؟ کب تک کراچی کا ٹریفک ریڈزون میں ہی پڑا رہیگا ؟

ا ب تو ایسا لگتا ہے کہ دعوے تو بہت ہیں مگر پُرسان حال کو ئی نہیں ہے ۔ خیر ایک طرف حقیقت یہ ہے کہ کراچی کی ٹریفک سسٹم کا کوئی نظام نظر نہیں آتا لیکن دوسری طرف حکومتی وزراء کے کراچی کو ایشیا ٗکی خوبصورت ترین شہر بنا نے اور ٹرانسپورٹ کے نظام کو مکمل بہتر بنا نے کے دعوؤں کو بھی نظر اندازنہیں کیا جا سکتا کیونکہ وزیر سندھ ناصر حسین شاہ کا کہنا ہے کہ اب ٹریک کو بڑھا یا جائے گا مگرجو موجود ہے اسکو بہترطریقے سے چلا یا جائے ۔

انہوں نے کہا کہ کراچی میں بے شک حکومت کی طرف سے ٹرانسپورٹ کا نظام نہ ہو نے کے برابر ہے  مگرہم اس کو بہتر صورتحال دینے کے لئے فوری اقدامات کر رہے ہیں ساتھ ہی ساتھ ہم اس طرف توجہ دے رہے ہیں کہ جہاں ناجائز مکانات اور بلڈنگ لو گوں نے بنائی ہیں اس طرف بھی کام کر رہے ہیں جبکہ ڈی آئی جی ٹریفک آصف اعجاز شیخ کا کہنا ہے کہ جو ترقیاتی کام ہو رہے ہیں جیسے یو نیورسٹی روڈ ، شاہراہِ فیصل وغیرہ پر تو یہ اچھی بات ہے مگر اسکے ساتھ ہی ٹریفک بدترین ہو جاتی ہے مگر اتنی ٹریفک پولیس نفری کم ہو تی ہے جس کی وجہ سے کنٹرول نہیں ہو رہا اس کو بڑھا نے کی ضرورت ہے اب امید ہے کہ نفری میں اضافہ ہو گا ۔ اصل میں کراچی میں صرف ٹریفک کا مسئلہ نہیں ہے ۔

مسئلہ روڈ کا خراب ہونا ، پانی کا کھڑا ہونا ، ترقیاتی کام یہ سب مل کر ایک مسئلہ بن چکے ہیں لیکن ٹریفک پو لیس عوام کی خدمت کر تے ہیں ۔مزید انہوں نے کہا کہ  عوام  قوانین کا خیال رکھیں جہاں کو ئی مسلئہ ہو رش ہو وہ  اہلکار سے پو چھ لیں تو وہ گائیڈ کر دیں گے اسکے علاوہ سی ایم صاحب نے خاص طور پر ہدایت کی ہے کہ اگر کہیں رش ہے ایمبو لینس پھنس گئی ہیں تو ہمارے ٹریفک پائلیٹ تیار ہیں جو ہسپتال تک پہنچا دیں گے ۔ یہ بہت خوش آئند اقدام ہے کراچی کے ٹرانسپورٹ کے مسائل پر قابو پا نے کے لئے اسکے علاوہ آل ٹرانسپورٹ اتحاد کے صدر نے بھی کراچی کے بہتر ٹرانسپورٹ ہو جا نے کی طرف سے پر امید ہو نے کا اظہار کیا ہے کہ جلد وہ اس مسئلے پر قابو پا لیں گے۔

اللہ کرے جس طرح یہ حضرات پر امید ہیں کہ مستقبل میں جلد ہی ٹریفک کی اس سنگین صورتحال سے کراچی کو نکالا جا ئے گا اور مسلسل حادثات رو کنے کی طرف اقدام کئے جائیں گے ۔ چلیں انتظار انتظار اور انتظار کر تے ہیں اس امید پر کے بس جلد ہی ان خوفناک و خطرناک ٹریفک کے مسائل سے چھٹکارا حاصل کریں گے۔ وہ کہتے ہیں نہ کہ امید پر دنیا قائم ہے تو بس کراچی والوں امید کا دامن ہر گز مت چھوڑنا بھلے سے دنیا چھوڑنا  پڑجا ئے ۔ تو کیا ہوا؟اقدامات ، انتظامات ، قوانین سب ہی کچھ تو ہورہے ہیں بس ایک دن ضرور آئے گا کہ کراچی میں ٹریفک کا نظام ضرور بہترین ہوجائے گا انشاءاللہ!

 

Share this page:

0 Comments

Write a Comment

Your email address will not be published.
Required fields are marked *